وزیرصحت سندھ نےاسکولز کھولنے کی مخالفت کردی

کراچی :وزیرصحت سندھ ڈاکٹرعذرا پیچوہو نے کورونا کے خاتمے تک پرائمری اور مڈل اسکولز کھولنے کی مخالفت کردی۔
تفصیلات کے مطابق وزیر صحت سندھ کا کہنا ہے کہ پرائمری اور مڈل سکولز نہیں کھولنے چاہئیے ، بچوں کے ایک ساتھ کھیلنے سے کورونا پھیلنے کا خطرہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جب تک کورونا ختم نہیں ہو جاتا اس وقت تک چھوٹے بچوں کو گھروں پر آن لائن کلاسز کے ذریعے تعلیم دی جائے۔ کورونا سے چھٹکارا پائے بغیر جلد بازی میں فیصلے نہ کئے جائیں، صرف میٹرک، انٹر اور جامعات کو ایس او پیز کے تحت کھولا جا سکتا ہے۔
صوبائی وزیر صحت کا کہنا تھا کہ 14 سال سے بڑے اسٹوڈنٹس کو سمجھایا جا سکتا ہے، چھوٹے بچوں کو سوشلائز کرنے سے کیسے روک سکتے ہیں ؟ چھوٹے بچے اپنا ناک، منہ اور آنکھیں بار بار چھوتے ہیں، اس طرح بچے اپنے گھر والوں کو بھی متاثر کرسکتے ہیں۔اسکولز کھلنے سے وائرس پوری کمیونٹی میں پھیل سکتا ہے ۔
واضح رہے کہ حکومت نے عالمی وبا کورونا وائرس کے پیش نظر جاری لاک ڈاؤن کے دوران ملک بھر میں بند تعلیمی اداروں کو 15ستمبر کو کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔

News Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں