بد قسمت طیارے کے پائلٹ سجاد گل کی ایئر کنٹرول سے آخری گفتگو سامنے آ گئی

کراچی : حادثے سے چند لمحے قبل بد قسمت طیارے کے پائلٹ سجاد گل کی ایئر کنٹرول سے آخری گفتگو سامنے آ گئی، جبکہ طیارے کا بلیک باکس بھی مل گیا ۔
جی این این کے مطابق قومی ایئرلائنز کے بدقسمت طیارے نے دوپہر ایک بج کر 10 منٹ پرلاہور سے اڑان بھری، کراچی کی حدود میں داخل ہوتے ہی طیارے کا ایک انجن بند ہو گیا ، دو پہر2بج کر33منٹ پر پائلٹ سجاد گل نے ایئرٹریفک کنٹرول کو آگاہ کیا کہ طیارے کا انجن جواب دے چکا، اور وہ بائیں جانب مڑ رہا ہے، براہ راست لینڈنگ کرنے لگے ہیں۔ایمرجنسی لینڈنگ کیلئے کیا رن وے کلیئر ہے ؟
ایئرٹریفک کنٹرول نے پائلٹ کو بتایا کہ دونوں رن وے کلیئر ہیں ، آپ آسانی سے لینڈنگ کر سکتے ہیں۔ جواب میں پائلٹ راجرکہتاہے اور 4 بارمے ڈے، مے ڈے بولتاہے، اس کے بعد فلائٹ 8303 سے رابطہ ختم ہوجاتاہے۔


دوسری جانب حادثے کا شکار طیارے کا بلیک باکس مل گیا ہے۔بلیک باکس کو ایس آئی بی نے تحویل میں لے لیا ہے۔باکس کو ڈی کوڈ کرنے کے لئے متعلقہ کمپنی کو بھیجا جائے گا۔
واضح رہے کہ کراچی میں پی آئی اے کا مسافر طیارہ لینڈ نگ سے چند لمحے قبل ماڈل کالونی پرگر کر تباہ ہو گیا، ایئربس320 میں99مسافر اور عملے کے8ارکان سوار تھے،مکانوں میں لگی آگ پر قابو پالیا گیا، جائے حادثے پر امدادی کاروائیاں جاری ہیں اور ہسپتالوں میں ایمرجنسی نافذہے۔ وزیراعظم عمران خان کا طیارہ حادثے کی فوری تحقیقات کا حکم دے دیا ہے ۔

News Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں