کیپیٹل ہل پر ایک بار پھر حملے کا خطرہ منڈلانے لگا، واشنگٹن میں سیکیورٹی سخت

واشنگٹن : امریکا میں جمہوریت کی علامت کیپیٹل ہل پر ایک بار پھر حملے کا خطرہ منڈلانے لگا۔انٹیلی جنس اداروں کی تنبیہ پر واشنگٹن میں سکیورٹی سخت کردی گئی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق کانگریس میں آج ہونیوالے تمام اجلاس ملتوی کردیے گئے، سینیٹ کی کاروائی جاری رہے گی۔پولیس کا کہناہےکہ قانون سازوں یا کیپیٹل کمپلیکس پر کسی بھی قسم کے حملے کیلئے تیار ہیں۔ہوم لینڈ سکیورٹی اور وفاقی تحقیقاتی بیورو کی جانب سے تنبیہ کی گئی ہے کہ پرتشدد گروہ آج پارلیمنٹ پر حملہ کرکے ڈیموکریٹک قانون سازوں کو ہٹا کر کیپیٹل ہل کا کنڑول حاصل کرنے کا ارادہ رکھتاہے۔اس کیلئےصدرٹرمپ کے حامیوں کو واشنگٹن میں اکٹھا ہونے کی کال دی گئی ہے۔

رپورٹ کے مطابق انتہائی دائیں بازو کے گروہ کا ماننا ہے کہ 4مارچ کو سابق امریکی صدرڈونلڈٹرمپ دوبارہ اقتدار میں آئیں گے۔1933سے قبل تک تمام امریکی صدور4مارچ کو ہی حلف اٹھاتے آئے ہیں۔اس سے قبل سابق امریکی صدرٹرمپ کے وفادار کیپیٹل ہل کی عمارت پر حملہ کرچکے ہیں۔

Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں