پاکستان ٹیم نے میری کوچنگ میں بہت بہتری حاصل کی، مکی آرتھر

لاہور: قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کوچ مکی آرتھر کا کہنا ہے کہ کسی غیر ملکی کوچ کیلئے پاکستان میں تین سال کام کرنا بڑی کامیابی ہے، سمجھتا ہوں کہ پاکستان ٹیم نے میری کوچنگ میں بہت بہتری حاصل کی۔

قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کوچ مکی آرتھر کا غیر ملکی جریدے کو انٹرویو دیتے ہوئے کہنا تھا کہ اکمل براداران کی بات کی کوئی اہمیت نہیں، اکمل براداران جو کہتے ہیں میں سنتا نہیں، کامران اکمل آرام پسند کھلاڑی تھے، ان کو نان وکٹ کیپنگ آپشن پر رکھا لیکن وہ فیلڈنگ نہیں کرسکتے تھے۔مکی آرتھر کا کہنا تھا کہ کسی غیر ملکی کوچ کیلئے پاکستان میں تین سال کام کرنا بڑی کامیابی ہےمیںسمجھتا ہوں کہ پاکستان ٹیم نے میری کوچنگ میں بہت بہتری حاصل کی،میری کوچنگ کے دور میں پاکستان ٹیم میں کئی نوجوان کھلاڑی تیار ہوئے تھے۔مجھے پلیئرز سے جو درکار ہوتا ہے وہ صاف صاف کہتا، ڈھکی چھپی بات نہیں کرتا تھا۔

سابق کوچ قومی کرکٹ ٹیم مکی آرتھر کا کہنا ہے کہ پاکستان میں میرا وقت بہت یادگار، اچھا اور جذباتی گزرا،پاکستان میں ایک دن آپ ہیرو ہوتے ہیں اگلے روز ولن، پھر ایک پرفارمنس دوبارہ ہیرو بنادیتی،کوچنگ کا ہنر ہی اس بات میں میں ہے کہ آپ کا وژن ہو اور آپ اس پلان کے تحت چلیں،پاکستان میں نئے پلیئرز کی ڈولپمنٹ پر کام کیا جو آنے والے وقتوں میں طویل عرصہ تک خدمت کریں گے۔

Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں