گوگل نے سسٹم میں بڑی تبدیلی متعارف کروادی

نیویارک : گوگل نے اپنی ڈرائیومیں تبدیلی کرتے ہوئے ٹریش میں موجود میں فائلز کے30 دن بعد خودکار طریقے سے ڈیلیٹ ہونے کا سسٹم متعارف کرادیا۔
ٹیکنالوجی ویب سائٹ کے مطابق معروف سرچ انجن گوگل نے اپنے سسٹم میں بڑی تبدیلی متعارف کروا دی ، جس کے تحت ٹریش ڈرائیو میں موجود فائلز ایک ماہ بعد خود بخود ڈیلیٹ ہوجائیں گی ۔ گوگل انتظامیہ کی جانب سے یہ نئی تبدیلی 13 اکتوبر سے تمام صارفین کو مہیا ہوگی ، گوگل کی جانب سے صارفین کو 25 دن کا وقت دیا گیا ہے کہ اگر ان کے گوگل ڈرائیو ٹریش میں کوئی ضروری فائل موجود ہے تو وہ اسے اب بھی ری اسٹور کر سکتے ہیں کیونکہ 13 اکتوبر کے بعد تمام فائلز ڈیلیٹ ہوجائیں گی ۔ یہ تبدیلی جی سوٹ مصنوعات اور سروسز کی پالیسیوں کیلئے ہے جیسا کہ جی میل ۔ ایڈمنسٹریٹر صارف کے ٹریش فولڈرسے فعال صارف کی حذف شدہ اشیاء کو 25 دن تک بحال کرسکتے ہیں۔ گوگل والٹ میں منتظمین کے ذریعہ طے شدہ برقراررکھنے کی پالیسیاں اس تبدیلی سے متاثر نہیں ہوں گی ، جب تک کہ وہ متروک نہ ہوجائیں کیونکہ وہ اب بے کار ہیں۔ یہ تبدیلیاں ایسی اشیاء کو متاثر کرتی ہیں جو کسی بھی ڈیوائس اور کسی بھی پلیٹ فارم سے ٹریش میں ڈالے جاتے ہیں۔ ڈرائیو فائل اسٹریم کے ذریعہ حذف کردہ فائلوں کو 30 دن کے بعد سسٹم ٹریش سے پاک کردیں گے۔ اس سے بیک اپ اور مطابقت پذیری کے رویے پر کوئی اثر نہیں پڑتا ہے۔ شئیرڈ ڈرائیوز کے ٹریش میں شامل فائلیں 30 دن کے بعد خود بخود حذف ہوجاتی ہیں۔
واضح رہے کہ اس قبل گوگل ڈرائیو کے ٹریش میں موجود فائلز صارفین کو خود ڈیلیٹ کرنی پڑتی تھی۔

News Source

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں